خوشی کے ہر موقع پر مالی لحاظ سے کمزورں کو یاد رکھا جائے: ڈاکٹر افشاں

خوشی کے ہر موقع پر مالی لحاظ سے کمزورں کو یاد رکھا جائے: ڈاکٹر افشاں
جب تک صدقہ فطر ادانہیں کیا جاتا روزہ زمین اور آسمان کے درمیان معلق رہتا ہے
اسلام آباد,عیدالفطر کی خوشی کے موقع پر معاشرے کے اُن افراد کو بھی ساتھ لیکر چلنا چاہئے جو مالی لحاظ سے کمزور ہوں تاکہ وہ بھی خوشیوں میں شریک ہونے کے قابل ہو سکیں۔ ان خیالات کا اظہار ممتاز معالج سربراہ افشاں میڈیکل سنٹر ڈاکٹر افشاں خان نے ایونٹ میں آن لائن گفتگو میں کیا۔صدقہ فطر کی بابت انہوں نے کہا کہ صدقہ ہر مسلمان مرد وعورت پر واجب ہے جو صاحبِ نصاب ہو اور اُس پر زکوٰۃ واجب ہو۔حضرت انس بن مالک ؓ فرماتے ہیں کہ حضور پاک ؐنے فرمایا ”کہ جب تک صدقہ فطر ادانہیں کیا جاتا بندے کا روزہ زمین اور آسمان کے درمیان معلق رہتا ہے“ نبی پاکؐ نے صدقہ فطر مقرر فرمایا تاکہ فضول اور بے ہودہ کلام سے روزہ کی پاکیزگی اور صفائی ہوجائے اورمسکینوں کا کھانا ہو جائے۔ڈاکٹر افشاں خان نے بتایا کہعید مسلمانوں کیلئے جشن مسرت کا دن ہے جس سے ایک ہی دن قبل وہ ماہ مبارک تھا جس میں قرآن کریم نازل ہوا اور اس لحاظ سے یوم تشکر ہے کہ اللہ تعالیٰ نے ہم مسلمانوں کو اس مبارک مہینے میں روزہ رکھنے اور عبادت کرنے کی توفیق عطا فرمائی۔لیکن جس انداز سے اس خوشی کے دن کو منا نے کا حکم ہے وہ یہ ہے کہ اپنے غریب ومسکین مسلمان بھائیوں کو بھی اس جشن میں ضرور شریک کر لو

اپنا تبصرہ بھیجیں