مضبوط اور خوشحال پاکستان کے لیے سب کو کردار ادا کرنا چاہیے: محمد عبداللہ

مضبوط اور خوشحال پاکستان کے لیے سب کو کردار ادا کرنا چاہیے: محمد عبداللہ
قوم کی محنتیں رنگ لائیں گی، معاشی قوت بننے کا خواب ضرور شرمندہ تعبیر ہوگا
اسلام آباد ،، ممتاز سماجی رہنما عالمی شہرت کے حامل ٹاؤن پلانر محمد عبداللہ نے کہا کہ مضبوط اور خوشحال پاکستان کے لیے ہم سب کو ذمہ دارانہ کردار ادا کرنا پڑے گا۔ سماجی‘ سیاسی، عوامی‘ تعلیمی اور کاروباری طبقہ اپنے حصہ کی شمع روشن کرے تو پاکستان ہفتوں اور مہینوں میں مسائل کی گرداب سے نکل جائے گا۔ خصوصی گفتگو میں انہوں نے بتایا کہ قائداعظمؒ کے پاکستان نے مستقبل میں معاشی قوت بننا ہے انشاء اللہ یہ خواب ضرور شرمندہ تعبیر ہوگا۔انہوں نے بتایا کہ 97لاکھ تارکین وطن میں 70 لاکھ 22/23 ارب ڈالرز کا زرمبادلہ بھجوار ہے ہیں سرمایہ کاری کرنے والوں کی تعداد بہت تھوڑی ہے ہماری اورگرین اسٹیٹ مارکیٹنگ محفوظ سرمایہ کاری کا تصور دے کر پاکستانی سرمایہ کاروں کو بڑے پراجیکٹ کی طرف لا رہی ہے پاکستان کی کل ایکسپورٹ 20 سے 25 ارب ڈالر کی ہے 22/23 ارب ڈالرز تارکین وطن بجھوا رہے ہیں جبکہ امپورٹ70سے80ارب ڈ الر کی ہیں،20سے30ار ب ڈ الر خسا رے کو پورا کر نے کیلئے وفا قی حکو مت دوست مما لک کے ساتھ آ ئی ایم ایف اور ور لڈ بینک سے سخت شر ائط پر قر ضہ حاصل کرنے پر مجبور ہے۔ اگر دو ملین اوورسیز پاکستانیوں کی سرمایہ کاری کو مختلف پراجیکٹ سے منسلک کر دیا جائے تو 500 ارب ڈالر ملنے کی توقع ہیں۔حامل ٹاؤن پلانر محمد عبداللہ نے بتایا کیماضی قریب میں ملائشیاء نے سنگارپور کو ساتھ ملانے سے انکار کر دیا تھا۔ سنگار پور نے سرمایہ کاروں کو بڑے بڑے پراجیکٹ سے جوڑا تو آج وہ معاشی میدان میں کہاں پہنچ گیا؟ اس کی فی کس آمدن قابل رشک سمجھی جاتی ہے گویا انہوں نے کام کی عظمت کا فلسفہ جان لیا۔ محمد عبد اللہ نے کہا کہ بے ہنگم ٹریفک، بے ترتیب رہائشی سوسائیٹوں اور ماحول کی آلودگی نے اسلام آباد جیسے شہر بے مثال کا حسن گہنا دیا ہے اچھے اور مثالی رہائشی منصوبے کے لیے ضروری ہے کہ اربن ایریا میں پبلک پارک مختص ہونے کیساتھ صنعتی ایریاز میں آلودگی سے جڑے مسائل ختم کرنا ضروری ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں